+447504950603 info@shahinshah.com Cradley Heath West Midlands Birmingham UK

سبزیوں کی لڑائی

وکی کاغذ پینسل لیئے بڑی دیر سے کچھ ڈرائنگ کرنے یا لکھنے کا سوچ رہا تھا۔ وہ بڑے مزے سے صوفے پر بیٹھا تھا۔ وکی کے ابو کام پرگئے ہوئے تھے اور امی جان کچن میں کھانا پکانے کی تیاری میں مصروف تھیں ۔ وکی کی سمجھ میں کچھ نہ آیا کہ کیا کروں۔ وہ اٹھا اور امی جان کے پاس گیا تو دیکھا ، کچن میں تازہ تازہ ملی جلی سبزی پڑی تھی اور امی جان کھانا پکانے کی تیاری میں مصروف تھیں ۔ وہ اپنے کزن نومی کے پاس چلا گیا اور بولا۔ نومی بھائی۔! میں بہت بور ہو رہا ہوں اور کچھ کرنا چاہتا ہوں کیا آپ میری مدد کریں گے؟ نومی بھائی سوچنے لگے کہ کیا کیا جائے۔
نومی بولا۔وکی !میں بھی اپنے کالج کا کام کر رہا ہوں جو آدھے گھنٹے تک ختم ہو جائے گا۔ تم یوں کرو کہ امی کے پاس کچن میں جاؤ اور وہاں جو بھی سبزی رکھی ہو، اس کی تصویریں بنالو ۔پھر ہم ان پر کہانی لکھیں گے۔ وکی بہت خوش ہوا اور کاغذ، کلر پینسل لے کر امی جان کے پاس کچن میں آگیا اور بولا۔ امی جان !کیا میں ایک ایک سبزی لے سکتا ہوں؟
امی جان نے پوچھا۔ کیا کرو گے آپ ان کا؟ وکی بولا۔ امی جان! نومی بھائی نے کہا ہے کہ میں ان کی تصویر یں بنالوں۔ پھر وہ مجھے ان پر کہانی لکھنے میں مدد دیں گے۔ امی جان خوش ہو گئیں کہ چلو ڈرائنگ کرنا بھی آجائیگی اور پڑھائی میں مدد ملے گی۔ وکی کاغذ پھیلائے آلو، گاجر، مولی، سبز مرچ، ٹماٹر اور پیاز کی تصویریں بنانے لگا۔جب تصویریں بنا کر وہ نومی بھائی کے روم میں گیا تو وہ بھی اپنے کام سے فارغ ہو چکے تھے ۔وکی کی بنائی ہوئی تصویریں دیکھیں، کچھ کو تبدیل کیا، پھر دونوں سر جوڑ کر بیٹھ گئے ۔سوچتے سوچتے نومی کے ذہن میں اک اچھی سی کہانی کا خاکہ بن گیا۔ پھر وہ تصویروں کو ترتیب دے کر، کچھ کو تبدیل کر کے، وکی کو سمجھا کر کہانی لکھوانے لگا ۔

1 2 3

Leave a Comment

*