+447504950603 info@shahinshah.com Cradley Heath West Midlands Birmingham UK

غرور کا سر نیچا

بی ایم ڈبلیو کاربولی۔ میرا رنگ، میری آواز اور شیشے دیکھے ہیں تم نے؟ کیا مقابلہ کرسکتے ہوبھلا میرا؟ گھوڑابولا۔ میرا رنگ میرے پروردگار نے عطا کیا ہے، میرا شیشہ میری آنکھیں ہیں۔
ابھی دونوںیہ باتیں کر ہی رہے تھے کہ کار کا مالک آگیا۔وہ کار میں بیٹھا اورکار کوسٹارٹ کیا مگر گڑگڑ کی آواز کیساتھ کار بند ہو گئی۔ معلوم ہوا پیٹرول ختم ہو گیا ہے ۔لوگ دھکہ لگا کر اُسے پیٹرول پمپ کی طرف چلنے لگے۔ اتنے میں گھوڑا گاڑی کا مالک بھی آگیا۔ اُس نے گھوڑے کو پیار سے تھپکایا اور گھوڑا مالک کے اشارے پر چل پڑا۔گھوڑا دھکے کھاتی ہوئی کار کی طرف دیکھ کر مسکرا پڑا۔ پھر دل میں خدا سے کہنے لگا ۔اے میرے پرورد گار! تیری بنائی ہوئی چیز بھوک پیاس سے تو مر سکتی ہے، مگر رک نہیں سکتی ،نہ دھکے کھانے کی ضرورت پڑتی ہے۔ یا اللہ تیرا شکر گزار ہوں کہ تو نے مجھے تندرسی اورصحت دے رکھی ہے ۔
کار کا سر پہلے ہی شرم سے جھکا ہوا تھا،گھوڑا گاڑی کو جاتے دیکھ کر اور جھک گیا، جبکہ گھوڑا کہاں سے کہاں پہنچ گیا ۔ آپ بھی کبھی کسی بات پر غرور مت کرنا، کیونکہ غرور کرنے والوں کو نہ اللہ پسند کرتا ہے،نہ ہی اللہ کا رسول ۔غرور کرنے والا ہمیشہ نقصان میں رہتا ہے اور اسے بار بار شرمندہ ہونا پڑتا ہے۔

1 2

Leave a Comment

*